Hide Button

سیمی ٹِپٹ منشٹریز مندرجہ ذیل زبانوں میں مواد مہیا کرتی ہے:۔

English  |  中文  |  فارسی(Farsi)  |  हिन्दी(Hindi)

Português  |  ਪੰਜਾਬੀ(Punjabi)  |  Român

Русский  |  Español  |  தமிழ்(Tamil)  |  اردو(Urdu)

news

اَمریکہ کو دعوت کہ وُہ اَپنی بیداری کی اَصل شرط کی طرف آئے

سیمی ٹِپٹ نے حال ہی میں مشن نیٹ وَرک نیوز کو بتایا کہ عالمی طور پر حالیہ مالی بُحران ایک ایسی چنگاری ہے جوبیداری لانے کیلئے ایک بڑااہم کردارادا کررہی ہے لیکن یہ خود بیداری نہیں ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ لوگ پریشان ہو رہے ہیں۔ وُہ اَپنی اقدار کے بارے میں سوال کر رہےاورسوچنا شروع ہو گئے ہیں کہ دُنیاوی مال ومتاع کے علاوہ بھی زِندہ رہنے کیلئے کوئی بات ہے۔ یہ چِنگاری ہے۔ لیکن ہمیں خُدا کی طرف سے ایک آندھی کے چلنے کی ضرورت ہے جو اُن کے دِلوں پر اِس طور پرچلے تاکہ یہ چِنگاری بیداری کے شُعلوں میں تبدیل ہو جائے’’۔

گُزرےچند ہفتوںمیںٹِپٹ نےامریکہ کی کئی ریاستوں کا دورہ کیا اور اِس بات پر خصوصی زور دیا کہ مسیحیوں میں بیداری کی کِتنی زیادہ ضرورت ہے۔ سین انٹونیو کے مبشر کے نہ صرف اَپنے آبائی شہر میں بلکہ اِنڈیانا، میسی سِپی اور ٹینسَی میں بھی کلام سُنایا اورکلام کو بڑے زبردست طریقے سے ہر کلیسیامیں قبول کیا گیا۔

ٹِپٹ نے بائرام مِسی سِپی میں بھی خِدمت کی جوجیکسن کی برادری کے تھوڑے سے لوگ تھے۔ ہجوم ہررات اور زیادہ ہوتا چلا گیا اور رُوح القدس کی حضوری نے اِس ساری عبادت کو اپنے حصار میں لے لیا تھا۔ عبادت کے اِختتام پر کئی لوگ اسٹیج کے قریب آ گئے اور وُہ چاہتے تھے کہ خُدا کے ساتھ سفر میں اُن کی زِندگی بیداری کی لپیٹ میں آ جائے۔

ٹِپٹ ناپانی اِنڈیانا بھی گئے جہاں اُنہوں نے ناپانی مشنری چرچ میں بھی کلام سُنایا۔ جنہوں نے ایک بڑی کلیسیا کے سینئر پاسبان کے طور پر خِدمت کی وُہ ایس ٹی ایم کےبورڈ آف ڈائریکٹرز میں بھی خِدمت کرتے ہیں۔ جب سیمی نے کلام سُنایا تولوگوں نے اتوار صبح کی تینوں عبادات میں بڑے زبردست رَدعمل کا اظہار کیا۔ اُن کے پیغام کےاختتام پراسٹیج لوگوں سے بھر گیا تھا۔اُن میں سے بہتیرے رَو رہے تھے اور خُدا کے حضور یہ درخواست کر رہے تھے کہ اے خُدا ہمارے دِلوں کو نیا بنا دے تاکہ ‘‘اُس دوڑ کو جو ہمیں دَرپیش ہے اَچھی طرح دوڑ سکیں’’۔

ٹپٹ نے سامعین سے کہا کہ ‘‘خُدا نے ہمیں زِندگی میں ایک دوڑ کے دوڑنے کیلئے بلایا ہے اور ہمارا آخری نشانہ یہ ہے کہ مسیح کی مانند ہمارا کردار ہو جائے۔ اگر ہم چاہتے ہیں کہ چیمپئین بنیں تو پھرہمیں اِس سارےسفرمیںرُوحانی تازگی کی ضرورت ہے’’۔سیمی نے سچائیوں کےذریعہ بیداری کی ضرورت پر بات کی اوریہ مثالیں اُن یونانی دوڑدوڑنے والوں کی تھی جو زیرِ تربیت تھے۔ بہت سے لوگوں نے اَپنے آپ کو اِس پیغام کے مطابق پایا اور اَپنی رُوحانی تازگی کی ضرورت کا اِظہار کیا۔

میسی سِپَی میں بہت سے نوجوانوں نے سیمی کے پیغام پر رَدِ عمل کا اِظہار کیا۔ ٹپٹ نے کہا‘‘ یہ میرے لئے بہت بڑی حوصلہ افزائی کی بات ہے کہ میں جانتا بھی نہیں تھا کہ یہ نوجوان 62 سالہ بوڑھے شخص کی بات سُنیں گے بھی کہ نہیں۔ لیکن اُنہوںنے سُنا اوراُن میں سے بُہتیروں نے اَپنی زِندگی مسیح کے نام وَقف کر دی’’۔

ایک نوجوان لڑکی جس نے اَپنی زِندگی خُداوند کو دی وُہ بہت سے اور نوجوانوں کو مسیح کے پاس لانے کا وسیلہ بنی۔ ہر شام وُہ اَپنے کِسی ایک دوست کو میٹنگ میں لاتی اور اُن دوستوں نے بھی اپنی زِندگی مسیح کو دی۔ ایک شام جب اُس کے ساتھ کوئی نہیں آیا تو خُدا نے اُس کے دِل میں کثرت سے کام کیا تاکہ وُہ اپنے خاندان کو معاف کرے اور میل مِلاپ کرنے والی ہو۔

ٹپٹ نے کہا کہ میں اُمید کرتا ہوں کہ امریکہ میں کُچھ زیادہ وقت گُزاروں گا تاکہ مسیحیوں تک بیداری کا پیغام لے کر جائوں۔ اُنہوں نے اِس سِلسلے کا اِختتام سارے امریکہ کی مُختلف کلیسیائوں میں کلام سُنانے ہوئے اگست میں کیا اور یہ ٲخری ریاستیں چٹانوگا اور ٹینسَی ہیں۔ اُنہوں نے بے سائیڈ بیپٹسٹ چرچ میں بھی کلام سُنایا جو ہیریسن ٹینیسَی میں ہے۔ اِتوار صُبح کی دوعبادات میں کلام سُنانے کے بعد شام کو اُنہوں نے ایک ایسی کلیسیا میں کلام سُنایا جو کلام کے سُننے کیلئے بھوکی اور پیاسی تھی۔ بہت سے لوگوں نے کلام کو قبول کیا۔

سیمی ٹپٹ کیلئے دُعا کریں کیونکہ وُہ مسلسل امریکہ کو للکار رہے ہیں کہ وُہ عظیم رُوحانی بیداری کیلئے دُعا کریں۔