Hide Button

سیمی ٹِپٹ منشٹریز مندرجہ ذیل زبانوں میں مواد مہیا کرتی ہے:۔

English  |  中文  |  فارسی(Farsi)  |  हिन्दी(Hindi)

Português  |  ਪੰਜਾਬੀ(Punjabi)  |  Român

Русский  |  Español  |  தமிழ்(Tamil)  |  اردو(Urdu)

devotions
تھوڑے میں وفادار

جب ہمارا خدا کے ساتھ آمنا سامنا ہوتا ہے تو میں نے کہا کہ خدا کی طرف سے حیران کر دینے والے واقعات کو گواہی کے طور پر بیان کیا جاتا ہے۔خداکے عجائب میں سے ایک کا تعلق مشرقی برلن سے ہے جو ۱۹۷۰ءمیں واقع ہوا۔میں ایک بزرگ پاسبان سے ملنے گیا جو مشرقی جرمنی کے تھے۔اُنہوں نے مجھے کہا کہ اگلے سال تقریباً ایک لاکھ کے قریب دہریئے اور اشتراکی نوجوان مشرقی جرمنی میں جمع ہونگے۔اُنہوں نے کہا کہ« وہ ساری دُنیا سے آئیں گے اور اُنہیں یہ تربیت دی جائیگی کہ وہ دوسرے لوگوں کو اشتراکیت اور دہریت کی طرف مائل کریں»۔اُس نے پھرمیری آنکھوں میں دیکھتے ہوئے کہا کہ« میں چاہتا ہوں کہ تم اُس میٹنگ میں آنے کیلئے دُعا کرنا شِروع کر دو تاکہ تُم آ کر ان نوجوانوں میں خوشخبری کی منادی کرو»۔

مجھے دھچکا سا لگا«وہ تو مجھے ایسا نہیں کرنے دینگے»۔میں نے احتجاج کیا۔یہ بوڑھا شخص بھی مجھے نہیں چھوڑے گا۔اُس نے کہا کہ« یہ آزادی ہے اور تُم ایسا کر سکتے ہو۔یہ نوجوان جھوٹی قسم کی آزادی محسوس کرنے کیلئے دُنیا کو متاثر کرینگے اور تُم اس کیلئے دُعا کرو»۔

میں نے غلطی کی۔میں نے اس کیلئے دُعا کی۔خدا نے میرے دِل سے ایک ہی لفظ میں کلام کیا کہ «جاﺅ»۔میں اپنے دو دوستوں فریڈ بِشپ اور فریڈسٹارک ویدر کے ہمراہ جرمنی گیا اور ان اشتراکی نوجوانوں کے اس تہوار میں شمولیت اختیار کی۔ہم اپنی آنکھوں پر یقین نہ کر پائے۔مشرق ، مغرب، شمال اور جنوب میں دہریوں کا ہی ہجوم نظر آتا تھا۔میرے پاس وقت نہیں کہ یہ بتا پاﺅں کہ ان نوجوانوں تک ہم کیسے پہنچے۔آنے والے مہینوں میں ایسا کرونگا۔یہ کہنا کافی ہو گا کہ ہم نے دو سو ایسے اشتراکی نوجوانوں کو دیکھا جو خدا وند یسوع مسیح پر ایمان لے آئے۔اس تہوار میں ۹۵، فیصد وہ نوجوان تھے جنہوں نے مسیح کو قبول کیااور مشرقی یورپ میں وہ مقامی کلیسیاﺅں میں شامل ہو گئے۔

مجھے اتفاق ہوا کہ اُن کلیسیاﺅں میں سے کئی میں جا کر منادی کروں۔اس کے نتیجے میں رُوح القدس نے ایک بشارتی خدمت کی تحریک دی جس نے آج ساری دُنیا کو اپنی لپیٹ میںلے رکھاہے۔اگر میں نے اُس تجربے کے وسیلہ سے کوئی سبق سیکھا تو یہ بالکل سادہ سی بات ہے۔جس کام کیلئے خدا نے ہمیں بلایا ہے اگر ہم اُس کے وفادار رہیں تو وہ اپنی قدرت کے وسیلہ سے ہمیں حیران کر دیگا اور جب کلام کہتا ہے کہ وہ ہماری سوچ اور خیال سے بڑھ کر کام کرنے کے لائق ہے تو ہم اُس کے مفہوم کو سمجھیں گے۔ کیاآپ مسیحی زندگی میں چھوٹی چھوٹی باتوں میں وفادار رہے ہیں؟ اگر ایسا ہی ہے تو آپ دیکھیں گے کہ کِسی دن خدا آپ کو آپ کے تصوّرات و خیالات سے بھی بڑھ کرحیران کر دیگا۔کیونکہ یسوع نے فرمایا کہ جو کوئی تھوڑے میں وفادار ہو گا اُسے زیادہ پر مختار بنایا جائے گا۔